Sufinama

اے صنم تجھ کو ہم بھلا نہ سکے

فنا بلند شہری

اے صنم تجھ کو ہم بھلا نہ سکے

فنا بلند شہری

MORE BYفنا بلند شہری

    اے صنم تجھ کو ہم بھلا نہ سکے

    دل سے داغ وفا مٹا نہ سکے

    اللہ اللہ اس آستاں کی کشش

    سر جھکایا تو سر اٹھا نہ سکے

    مٹ گئے شوق دید میں لیکن

    آپ جلوہ ہمیں دکھا نہ سکے

    تیری چاہت میں درد وہ پایا

    ہم زمانے میں چین پا نہ سکے

    دے کے دل تم کو جان بھی دے دی

    پھر بھی اپنا تمہیں بنا نہ سکے

    جب سے نسبت ہوئی ترے در سے

    ہم کسی در پہ سر جھکا نہ سکے

    عشق میں یہ عجب تماشہ ہے

    ان کو پایا تو خود کو پا نہ سکے

    ایسی بدلی ہوا زمانے کی

    زخم سینے کے مسکرا نہ سکے

    تم فناؔ کی لحد پہ بعد فنا

    آ کے دو پھول بھی چڑھا نہ سکے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY