Sufinama

کس گھر میں کس حجاب میں اے جاں نہاں ہو تم

شاہ اکبرؔ داناپوری

کس گھر میں کس حجاب میں اے جاں نہاں ہو تم

شاہ اکبرؔ داناپوری

MORE BYشاہ اکبرؔ داناپوری

    کس گھر میں کس حجاب میں اے جاں نہاں ہو تم

    ہم راہ دیکھتے ہیں تمہاری کہاں ہو تم

    مٹنے پر اپنے ناز نہ ہو کس طرح مجھے

    میں ہوں وہ بے نشاں کہ جس کے نشاں ہو تم

    پردہ دری کا آپ نہ کیجے گلہ اگر

    ہم سینہ چاک‌ کر کے دکھا دیں جہاں ہو تم

    دونوں جگہ ظہور برابر ہے آپ کا

    ذرے میں آفتاب میں یکساں عیاں ہو تم

    خالی نہیں ہے آپ کے جلوے سے کوئی شے

    دریا ہو اور قطروں کے اندر نہاں ہو تم

    حاضر ہے بزم یار میں سامان عیش سب

    اب کس کا انتظار ہے اکبرؔ کہاں ہو تم

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY