Sufinama

اس نے بھری محفل کو دیوانہ بنا ڈالا

سنجر غازیپوری

اس نے بھری محفل کو دیوانہ بنا ڈالا

سنجر غازیپوری

MORE BYسنجر غازیپوری

    اس نے بھری محفل کو دیوانہ بنا ڈالا

    خود شمع بنا سب کو پروانہ بنا ڈالا

    دل اپنا محمدؐ کا کاشانہ بنا ڈالا

    اجڑے ہوئے اس گھر کو شاہانہ بنا ڈالا

    وحدت کی پلا کر مے اس ساقیٔ کوثر نے

    ایک عالم کثرت کو مستانہ بنا ڈالا

    دکھلا کے جھلک اپنی اللہ نے موسیٰ کو

    دیوانہ بنا ڈالا پروانہ بنا ڈالا

    چلو سے پلا ساقی پیمانہ نہیں تو کیا

    ہم نے انہیں ہاتھوں کو پیمانہ بنا ڈالا

    اب یاد مرے دل میں ہر وقت بتوں کی ہے

    اللہ کا گھر میں نے بت خانہ بنا ڈالا

    سنجرؔ کو خیر اپنی کچھ بھی نہیں وحشت ہیں

    الفت نے اسے ایسا دیوانہ بنا ڈالا

    مأخذ :
    • کتاب : دیوان سنجرالمعروف گلدستہ کلام سجنر (Pg. 13)
    • Author : سنجر غازیپوری
    • مطبع : شیخ غلام حسین اینڈ سنز تاجران کتب کشمیری بازار لاہور

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY