Sufinama

ہٹا جب میم کا پردہ تو کیا معلوم ہوتا ہے

سنجر غازیپوری

ہٹا جب میم کا پردہ تو کیا معلوم ہوتا ہے

سنجر غازیپوری

MORE BYسنجر غازیپوری

    ہٹا جب میم کا پردہ تو کیا معلوم ہوتا ہے

    احد احمدؐ میں خود جلوہ نما معلوم ہوتا ہے

    مرادیں دل میں جو ہوں چل کے اب لے لو محمدؐ سے

    کہ دنیا میں سخی در آپ کا معلوم ہوتا ہے

    چلو اے حاجیوں نگہ سے سر کے بل مدینہ کو

    وہاں جنت کا دروازہ کھلا معلوم ہوتا ہے

    پڑھا سنگ ریزے نے کلمہ قمر شق تھا اشاروں میں

    نبیؐ کا معجزہ شان خدا معلوم ہوتا ہے

    جدھر دیکھا جدھر تاکا وہی موجود ہے سنجرؔ

    مجھے ہر ذرہ میں نور خدا معلوم ہوتا ہے

    مأخذ :
    • کتاب : دیوان سنجرالمعروف گلدستہ کلام سجنر (Pg. 158)
    • Author : سنجر غازیپوری
    • مطبع : شیخ غلام حسین اینڈ سنز تاجران کتب کشمیری بازار لاہور

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY