Sufinama

مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

سنجر غازیپوری

مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

سنجر غازیپوری

MORE BYسنجر غازیپوری

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    نینا لگائے بھئی میں دکھیاری

    پیت نہ آئی راس رے خواجہ

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    برہا دیوانی ہوئی پیت کی ماری

    اب تو بلا لے موئے پاس رے خواجہ

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    رنگ تورا ہر جا رچت ہے

    پھولن پھولن پاس رے خواجہ

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    اپنی جوگنیا پہ کرپا کر دے

    کب تک رے بنواس رے خواجہ

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    ہر ہر گھٹ میں تورا رے پنگھٹ

    کس پر تھا پریاس رے خواجہ

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    سنجرؔ بچارے کو کوؤ نہ پوچھے

    راکھت ہے توری آس رے خواجہ

    مجھ بیکس کو تورے چرن کی ہے آس رے خواجہ

    مأخذ :
    • کتاب : دیوان سنجرالمعروف گلدستہ کلام سجنر (Pg. 28)
    • Author : سنجر غازیپوری
    • مطبع : شیخ غلام حسین اینڈ سنز تاجران کتب کشمیری بازار لاہور

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY