Font by Mehr Nastaliq Web
Sufinama

زیست سے سرگرمی ذوق طلب منزل نہیں

فنا بدایونی

زیست سے سرگرمی ذوق طلب منزل نہیں

فنا بدایونی

MORE BYفنا بدایونی

    زیست سے سرگرمی ذوق طلب منزل نہیں

    یہ وہ دریا ہے کہ جو شرمندۂ ساحل نہیں

    جی رہے ہیں ہم بفیضِ غم یہ ہے شان کمال

    ورنہ مٹ جانا محبت میں کوئی مشکل نہیں

    وائے نادانی جسے سمجاتھا خضر راہ دل

    رہزن منزل وہی ہے رہبرمنزل نہیں

    وہ کلی چٹکی تھی گلشن میں بحسن اتفاق

    آپ کیوں شرمائے آواز شکست دل نہیں

    جب نہ ہوں دل کے شرارے پردہ الفاظ میں

    اے فناؔ پھر شعر کہنے کا کوئی حاصل نہیں

    مأخذ :
    • کتاب : تذکرہ شعرائے اتر پردیش حصہ دوئم (Pg. 253)
    • Author : عرفان عباسی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے