Sufinama

مری لو لگی ہے تجھ سے غم زندگی مٹا دے

فنا بلند شہری

مری لو لگی ہے تجھ سے غم زندگی مٹا دے

فنا بلند شہری

MORE BYفنا بلند شہری

    مری لو لگی ہے تجھ سے غم زندگی مٹا دے

    ترا نام ہے مسیحا مرے درد کی دوا دے

    مری پیاس بڑھ رہی ہے مرا دل سلگ رہا ہے

    جو نہیں ہے جام ساقی تو نگاہ سے پلا دے

    مرا مدعا ہے اتنا تو اگر کرے گوارہ

    میں فقیر آستاں ہوں مجھے بندگی سکھا دے

    مجھے شوق بندگی میں یہی ایک آرزو ہے

    ترا نقش پا جہاں ہو مرا سر وہیں جھکا دے

    مجھے دیکھ کر پریشاں کیا کہے گا یہ زمانہ

    میں بھٹک رہا ہوں در در مجھے آ کے آسرا دے

    ترا جام جام کوثر ترا مے کدہ ہے جنت

    مرے حال پہ کرم کر مری تشنگی بجھا دے

    جسے آپ چاہتے تھے وہ فناؔ ہے اب کفن میں

    کوئی جا کے آج ان کو ذرا یہ خبر سنا دے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY