Sufinama

گو جرم زمانہ میں ہے اظہار محبت

اسیر محمدآبادی

گو جرم زمانہ میں ہے اظہار محبت

اسیر محمدآبادی

MORE BYاسیر محمدآبادی

    گو جرم زمانہ میں ہے اظہار محبت

    ہوتا ہے مگر آج بھی اقرار محبت

    بے تابی دل کرتی ہے اظہار محبت

    چہرے سے عیاں ہیں مرے آثار محبت

    عالم ہے یہ اب کش مکش دل کے سبب سے

    انکار محبت ہے نہ اقرار محبت

    تا حشر نہ اب ہوگا سکوں قلب کو میرے

    حائل ہے مری راہ میں دیوار محبت

    پر کیف ہے اس درجہ ترا بادۂ الفت

    سرمست رہا کرتا ہے سرشار محبت

    حالت ہے اسیرؔ آپ کی کیوں اتنی دگر گوں

    کیا آپ کو بھی ہو گیا آزار محبت

    مأخذ :
    • کتاب : تذکرہ شعرائے اتر پردیش جلد دسویں (Pg. 54)
    • Author : عرفان عباسی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY