Sufinama

تم ہو شریک غم تو مجھے کوئی غم نہیں

فنا بلند شہری

تم ہو شریک غم تو مجھے کوئی غم نہیں

فنا بلند شہری

MORE BYفنا بلند شہری

    تم ہو شریک غم تو مجھے کوئی غم نہیں

    دنیا بھی مرے واسطے جنت سے کم نہیں

    چاہا ہے تجھ کو تجھ پہ لٹائی ہے زندگی

    تیرے علاوہ کچھ مرا دین و دھرم نہیں

    وہ بد نصیب راحت ہستی نہ پا سکا

    جس پہ مرے حبیب کی چشم کرم نہیں

    میں بندۂ صنم سہی کافر سہی مگر

    پائے مرا مقام کسی میں یہ دم نہیں

    اس راستے میں سر کو جھکانا حرام ہے

    جس راستے میں آپ کا نقش قدم نہیں

    اے آنے والے اپنی جبیں کو جھکا کر آ

    یہ آستان یار ہے کوئے حرم نہیں

    اہل جنوں کا اس لئے مشرب جدا رہا

    واقف نیاز عشق سے شیخ حرم نہیں

    منکر رہ وفا میں فناؔ کس طرح سے ہو

    میرا جہاں میں کوئی وجود و عدم نہیں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY