Sufinama

جہان غم میں جسے بے قرار دیکھا ہے

ادیب سہارنپوری

جہان غم میں جسے بے قرار دیکھا ہے

ادیب سہارنپوری

MORE BYادیب سہارنپوری

    جہان غم میں جسے بے قرار دیکھا ہے

    اسیر کشمکش انتظار دیکھا ہے

    حریص ہے نگہ شوق کس قدر کہ انہیں

    بچا بچا کے نظر بار بار دیکھا ہے

    چبھی ہیں سینے میں جینے کی حسرتیں کیا کیا

    کسی نے جب ہمیں بیگانہ وار دیکھا ہے

    سمجھ میں آ نہ سکے معجزے محبت کے

    کہ نا امید کو امیدوار دیکھا ہے

    کہیں جہاں میں نہ ہم کو ملا وہ لطف حیات

    جو زیر سایۂ دیوار یار دیکھا ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY