Font by Mehr Nastaliq Web
Sufinama

عشق کا راز گر نہ کھل جاتا

میر حسن دہلوی

عشق کا راز گر نہ کھل جاتا

میر حسن دہلوی

MORE BYمیر حسن دہلوی

    عشق کا راز گر نہ کھل جاتا

    اس قدر تو نہ ہم سے شرماتا

    آ کے تب بیٹھتا ہے وہ ہم پاس

    آپ میں جب ہمیں نہیں پاتا

    زندگی نے وفا نہ کی ورنہ

    میں تماشا وفا کا دکھلاتا

    مر گئے ہم تو کہتے کہتے حال

    کچھ تو تو بھی زباں سے فرماتا

    میں تو جاتا ہی آپ سے لیکن

    تیرے کہنے سے اب نہیں جاتا

    سب یہ باتیں ہیں چاہ کی ورنہ

    اس قدر تو نہ ہم پر جھنجھلاتا

    جیسے یہ میر کا سنا ہے شعر

    گر یہ بے اختیار ہے آتا

    خواب میں بھی رہا تو آنے سے

    دیکھنے ہی کا تھا یہ سب ناتا

    میں نہ سنتا کسی کی بات حسنؔ

    دل جو باتیں نہ مجھ کو سنواتا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    عابدہ پروین

    عابدہ پروین

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے