Font by Mehr Nastaliq Web
Sufinama

الہی ہاتھ پھیلائے ہوئے ہیں ہم ترے آگے

شاہ محسن داناپوری

الہی ہاتھ پھیلائے ہوئے ہیں ہم ترے آگے

شاہ محسن داناپوری

MORE BYشاہ محسن داناپوری

    دلچسپ معلومات

    مناجات بدرگاہ قاضی الحاجات

    الہی ہاتھ پھیلائے ہوئے ہیں ہم ترے آگے

    کریں گے آج اپنی قوم کا ماتم ترے آگے

    دکھانے آے ہیں زخم بے مرہم ترے آگے

    کہ دھرانا ہے اپنا قصۂ پر غم ترے آگے

    الہی بن کے جو بگڑے ہیں ان کی دستگیری کر

    پھر ان نا چیز ذروں کو عطا روشن ضمیری کر

    کنارا عزم و استقلال نے ہم سے کیا یارب

    مگر جو کچھ ہوا وہ اپنی غفلت سے ہوا یارب

    ہوئی تشہیر ہم تر دامنوں کی جابجا یارب

    جو کچھ قسمت میں لکھا تھا وہ پورا ہوچکا یارب

    ہمارے نیر اقبال کو پھر جلوہ گر کردے

    الہی پھر ہماری تیغ کو تیغِ دوسر کردے

    خداوندا مری فریاد میں پیدا اثر کردے

    عطا کر چشم حق بیں جو مجھے اہلِ نظر کردے

    مجھے دیوانۂ زلف محمد سر بسر کردے

    پھر اپنی معرفت کا اک چھلکتا جام بھردے

    یہی دل کی تمنا ہے یہی ہے آرزو دل کی

    کہ ہوجائے مئے الفت سے محسنؔ شست و شو دل کی

    مأخذ :
    • کتاب : کلیات محسن

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے