Sufinama

بے تو اے ختم رسل زیست حرام است مرا

نعمتی پھلواروی

بے تو اے ختم رسل زیست حرام است مرا

نعمتی پھلواروی

MORE BYنعمتی پھلواروی

    بے تو اے ختم رسل زیست حرام است مرا

    ہر سحر بے رخ تو ظلمت شام است مرا

    1. آپ کے بغیر اے ختم رسل زندگی مجھ پر حرام ہے، آپ کے رخ تاباں کے بغیر ہر صبح میرے لئے تاریک شام ہے۔

    گر گزارم درِ تو بر درِ کوئے کہ روم

    جز تو مقصود زکونین کدام است مرا

    2. آپ کا در اگر چھوڑوں تو کس کی گلی میں جاؤں؟ آپ کے سوا دونوں جہان میں میرا مقصود کون ہے؟ (کیونکہ اللہ ہی نے آپ کو مقصود ِ کائنات بنایا ہے)۔

    دولتم بس کہ گوید مہ تابان عرب

    نعمتی گرچہ زبونست غلام است مرا

    3. میرے لئے یہ دولت کافی ہے کہ عرب کے ماہ تاباں یہ کہہ دیں کہ نعمتی گرچہ بد حال اور برا ہے لیکن میرا غلام ہے۔

    مأخذ :
    • کتاب : نغمات الانس فی مجالس القدس (Pg. 140)
    • Author :شاہ ہلال احمد قادری
    • مطبع : دارالاشاعت خانقاہ مجیبیہ (2016)
    • اشاعت : First

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے