Sufinama

کلام

صوفیائے کرام کے لکھے ہوئے زیادہ تر اشعار کلام کے زمرے میں ہی آتا ہے اور اسے محفل سماع کے دوران بھی گایا جاتا ہے۔

1790 -1854

آخری مغل بادشاہ بہادر شاہ ظفر کے استاد اور ملک الشعرا۔ غالب کے ساتھ ان کی رقابت مشہور ہے

1914 -1984

بیسویں صدی کی چوتھی اور پانچویں دہائیوں کے مقبول ترین شاعروں میں شامل، فیض احمد فیض کے ہم عصر

1856 -1921

ہندوستان کے مشہور عالم دین اور نعت گو شاعر

1928 -2004

پاکستان کے ممتاز نعت گو شاعر ہیں

1920 -1963

قبل از جدید شاعروں میں شامل، روایت اور جدت کے امتزاج کی شاعری کے لیے جانے جاتے ہیں؛ ریڈیو پاکستان سے وابستہ رہے

1832 -1906

حیدرآباد کے مشہور ابوالعلائی صوفی

1914 -1981

حسن و عشق اور انقلاب کے شاعر،ڈراما نگار،مشاعرہ کے بڑے شاعر،اپنی نظم "جھوم کر اٹھو وطن آزاد کرنے کے لیے " کی وجہ سے مشہور

1901 -1971

آستانہ بیت الامان، گنج شریف، مغل پورہ، لاہور کے زندہ دار بزرگ

1839 -1901

حیدرآباد کے معروف صوفی شاعر

1253 -1325

خواجہ نظام الدین اولیا کے چہیتے مرید اور فارسی و اردو کے پسندیدہ صوفی شاعر، ماہر موسیقی، انہیں طوطی ہند بھی کہا جاتا ہے۔

1829 -1900

داغ دہلوی کے ہم عصر۔ اپنی غزل ’سرکتی جائے ہے رخ سے نقاب آہستہ آہستہ‘ کے لئے مشہور ہیں

1753 -1817

لکھنو کے سب سے گرم مزاج شاعر، میر تقی میر کے ہم عصر اور مصحفی کے ساتھ چشمک کے لئے مشہور

1874 -1952

حاجی وارث علی شاہ کے مرید اور اپنی صوفیانہ شاعری کے لئے مشہور

1680 -1757

پنجاب کے معروف صوفی شاعر جن کے اشعار سے آج بھی ایک خاص رنگ پیدا ہوتا ہے اور روح کو تسکین میسر ہوتی ہے۔

1900 -1974

لکھنؤ کے معروف نعت گو شاعر

شاہ اکبر داناپوری کے شاگرد اور مثنوی ’’جلوۂ عشق‘‘ اور ایک ناول ’’نیم ملا خطرۂ ایماں‘‘ کے مصنف

1876 -1936

معروف نعت گو شاعر اور ’’بے خود کئے دیتے ہیں انداز حجابانہ‘‘ کے لئے مشہور

1940 -2009

"بھر دو جھولی میری یا محمد" لکھنے والے شاعر

1949 -2009

عہد حاضر کے معروف صوفی شاعر اور پیر مہر علی شاہ کے پڑپوتے

1890 -1960

ممتاز ترین قبل ازجدید شاعروں میں نمایاں، بے پناہ مقبولیت کے لئے معروف

آپ حضرت محمد علی شاہ خیرآبادی کے خلیفہ اور صاحب دیوان شاعر ہیں

1941 -2008

’’یہ سب تمہارا کرم ہے آقا کہ بات اب تک بنی ہوئی ہے" کے لئے مشہور

1748 -1826

خواجہ ضیاؤالدین کے صحبت یافتہ اور شاہ نصیر دہلوی کے شاگرد رشید

1715 -1788

عظیم آباد کے ممتاز صوفی شاعر اور بارگاہ حضرت عشق کے روح رواں

1884 -1944

مولانا اشرف علی تھانوی کے مرید و خلیفہ

1845 -1901

پاکستان سے تعلق رکھنے والے مشہور صوفی شاعر, آپ کی کافیاں کافی مشہور ہیں

1721 -1785

صوفی شاعر، ہندوستانی موسیقی کے گہرے علم کے لئے مشہور

1831 -1905

مقبول ترین اردو شاعروں میں سے ایک ، شاعری میں برجستگی ، شوخی اور محاوروں کے استعمال کے لئے مشہور

1902 -1978

معروف صوفی شاعر اور بابا تاج الدین ناگوری کے خلیفہ یوسف شاہ تاجی کے مرید

اپنے عہد میں صوفیانہ اشعار کے لئے مشہور

1739 -1827

سندھی زبان کے مشہور صوفی شاعر

1630 -1691

پنجابی اور فارسی زبان کے معروف صوفی شاعر

1880 -1951

ممتاز ترین قبل از جدید شاعروں میں نمایاں، سیکڑوں شاگردوں کے استاد اور حاجی وارث علی شاہ کے مرید

1843 -1909

بہار کے عظیم صوفی شاعر

1767 -1858

اودھ کےمعروف صوفی شاعر

حیدرآباد کے معروف صوفی شاعر

1857 -1947

حضرت مرزا سردار بیگ کے خلیفہ اور اپنے وقت کے ہر دل عزیز صوفی شاعر

1881 -1945

حضرت شاہ اکبر داناپوری کے صاحبزادے اور خانقاہ سجادیہ ابوالعلائیہ، داناپور کے سجادہ نشین

1775 -1834

ہند و پاک کے معروف روحانی شاعر

1745 -1806

خانقاہ کاظمیہ، کاکوری کے بانی اور روحانی شاعر

1908 -1991

ہندوپاک کے مقبول شاعر و ادیب اور عمر خیام کی رباعیات کے منظوم مترجم

1913 -1981

سیماب اکبرآبادی کے شاگرد رشید

1914 -1993

ماہنامہ ’’محفل‘‘ لاہور کے مدیر، دنیائے شعر و ادب کی جانی پہچانی شخصیت ہیں