Sufinama

ہندستانی صوفی شعرا

ہندستانی صوفی شعرا

1873 -1951 लखनऊ

مختلف خوبیوں والا ایک عظیم شاعر

1834 -1917 غازی پور

چودھویں صدی ہجری کے ممتاز صوفی شاعر اور خانقاہ رشیدیہ جون پور کے سجادہ نشیں

1800 -1882 लखनऊ

مصحفی کا ممتاز شاگرد

1832 -1906 حیدرآباد

حیدرآباد کے مشہور ابوالعلائی صوفی

1253 -1325 دہلی

خواجہ نظام الدین اولیا کے چہیتے مرید اور فارسی و اردو کے پسندیدہ صوفی شاعر، ماہر موسیقی، انہیں طوطی ہند بھی کہا جاتا ہے۔

1829 -1900 رام پور

داغ دہلوی کے ہم عصر۔ اپنی غزل ’سرکتی جائے ہے رخ سے نقاب آہستہ آہستہ‘ کے لئے مشہور ہیں

1874 -1952 مرادآباد

حاجی وارث علی شاہ کے مرید اور اپنی صوفیانہ شاعری کے لئے مشہور

1790 -1857 لکھنؤ

ناسخ کا ایک گمنام شاگرد

1209 -1324 पानीपत

ہندوستان کے مشہور صوفی اور خواجہ نظام الدین اولیا کے معاصر

1900 -1974 لاہور

لکھنؤ کے معروف نعت گو شاعر

1876 -1936 اناو

معروف نعت گو شاعر اور ’’بے خود کئے دیتے ہیں انداز حجابانہ‘‘ کے لئے مشہور

1890 -1960 مرادآباد

ممتاز ترین قبل ازجدید شاعروں میں نمایاں، بے پناہ مقبولیت کے لئے معروف

1898 -1982 لکھنؤ

اردو ادب کے نامور اور قادر الکلام شاعر

-1961 گیا

حاجی وارث علی شاہ کے مرید اورعرش گیاوی کے شاگرد

ٹھمریاں کہنے والا ایک حیدرآبادی شاعر

1715 -1788 پٹنہ

عظیم آباد کے ممتاز صوفی شاعر اور بارگاہ حضرت عشق کے روح رواں

خانقاہ ناصریہ، سہارن پور کے چشم و چراغ

تیرھویں صدی ہجری کے مقبول زمانہ صوفی اور پیر بیگہہ میں واقع آستانہ چشتی چمن کے روح رواں

1721 -1785 دہلی

صوفی شاعر، ہندوستانی موسیقی کے گہرے علم کے لئے مشہور

چودھویں صدی ہجری کے مقبول صوفی شاعر، آپ کی درگاہ بریلی شہر کے نومحلہ میں واقع ہے۔

1615 -1659 دہلی

مغلیہ سلطنت کے بادشاہ شاہ جہاں اور ملکہ ممتاز کے بڑے صاحبزادے جنہوں نے صوفیانہ روایت کو مزید جلا بخشی، ان کے تعلقات سکھوں کے گرووں سے نہایت خوشگوار تھے۔

1902 -1978 کراچی

معروف صوفی شاعر اور بابا تاج الدین ناگوری کے خلیفہ یوسف شاہ تاجی کے مرید

1928 -1974 لاہور

پاکستان کا مست بادہ الست شاعر

صوفی شاعر کی حیثیت سے مقبول تھے

1880 -1951 آگرہ

ممتاز ترین قبل از جدید شاعروں میں نمایاں، سیکڑوں شاگردوں کے استاد اور حاجی وارث علی شاہ کے مرید

مغلیہ سلطنت کے شہنشاہ شاہ جہاں کے صاحبزادے

خانقاہ سجادیہ ابوالعُلائیہ، داناپور کے معروف سجادہ نشیں

حضرت شاہ اکبر داناپوری کے صاحبزادے اور خانقاہ سجادیہ ابوالعلائیہ، داناپور کے سجادہ نشین

1703 -1762 دہلی

برصغیر کے ممتاز عالم دین

1745 -1806 کاکوری

خانقاہ کاظمیہ، کاکوری کے بانی اور روحانی شاعر

برصغیر کے مشہور صوفی اور مکتوبات صدی و دو صدی کے مصنف

جناب حضور شاہ امین احمد فردوسی بہاری کے صاحبزادے

1933 میرٹھ

مشاعروں کے انتہائی مقبول شاعر

نعتیہ ادب کے محقق اور خانقاہ حلیمیہ ابوالعُلائیہ، الہ آباد کے معروف سجادہ نشیں

1456 -1537 गंगोह

سلسلۂ چشتیہ صابریہ کے معروف صوفی

1899 -1978 لاہور

اردو، فارسی اور پنجابی زبان کے شاعر

1769 -1851 دہلی

مغل بادشاہ شاہ عالم ثانی کے استاد محترم

1906 -1950 ڈھاکہ

ڈھاکہ یونیورسیٹی کے شعبہ اردو میں بحیثیت استاد